الیکشن جیتتے ہی مودی مسلمانوں کے خیر خواہ بن گئے ،بھارتی وزیر اعظم کے ایک عمل نے کروڑوں مسلمانوں کے دل جیت لیے

اسلام آباد (نیوز پاکستان) بھارتی وزیراغظم نریندر مودی نے صوبے جھارکھنڈ میں ایک 24سالہ مسلمان لڑکے تبریز انصاری کے انتہاء پسند ہندووں کے ہاتھوں تشدد کے بعد قتل کئے جانے پر انتہائی دکھ کا اظہار کیا ہے۔ اپنے ایک بیان بھارتی وزیر اعظم نے کہا کہ بھارت میں انتہاء

پسند ہندووں کی جانب سے مسلمانوں اور دوسری اقلیتوں کے خلاف بڑھتے ہوئے تشدد واقعات ایک سیکولر ملک کے لئے باعث تشویس ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جھارکھنڈ واقعے میں مسلمان نوجوان کی ہلاکت سے مجھے انتہائی افسو س ہوا ہے اور اس واقعے میں ملوث افراد کو سخت سزاء دی جانی چاہیے ۔ادھر مسلمانوں اور دوسری اقلیتوں کے خلاف بڑھتے ہوئے تشدد واقعات پر بھارت کی حزب اختلاف جماعتوں کی جانب سے نریندرا مودی کو شدید تنقید کا سامنا ہے ۔ دریں اثناء جھارکھنڈ پولیس نے واقعے میں ملوث مرکزی ملزم سمیت 11افراد کو گرفتار کرلیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں