پلیز مریم نوازکو بچالیں۔۔۔ڈان لیکس کے معاملے پر مریم نواز کو کس شخص نے بچایا؟ حقائق سامنے آگئے

اسلام آباد (نیوز پاکستان) معروف صحافی عارف حمید بھٹی کا کہنا ہے کہ کہیں نہ کہیں ہماری بھی خامی ہے۔ڈان لیکس میں یہ بات کنفرم ہو گئی تھی کہ محترمہ مریم نواز اور پرویز رشید کا گینگ ملوث ہے۔اس کے بعد ایک ہم ملاقات ہوتی ہے جس میں کہا جاتا ہے کہ پلیز مریم

نواز کو بچا لیں۔اس کے بعد اچانک وہ سعودی عرب چلے گئے۔وہ سعودی عرب حج کے لیے بھی جا سکتے ہیں اور عمرے کے لیے بھی۔مریم کی بات کنفرم تھی۔مریم نواز نے کہا تھا کہ سجن جندال اور حسین نواز کی دوستی ہے۔سجن جندال مری بھی آئے تھے۔یا تو یہ کام وہاں سے ہو سکتا ہے یا پھر ان ممالک سے جو پاکستان کے خیر خواہ نہیں ہیں۔عارف حمید بھٹی نے مزید کہا وہ چھ فٹ کے قد کا بندہ تھا جس نے مریم نواز کو ڈان لیکس سے بچایا۔عارف حمید بھٹی نے مزید کہا کہ مریم نواز چند دن پہلے ڈاکٹر عظمت کے پاس گئیں تھیں اللہ انہیں صحت دے۔مریم نواز کو آج کل غصہ بہت آ رہا ہوتا ہے جس کے علاج کے لیے وہ ڈاکٹر کے پاس جاتی ہیں۔واضح رہے پاکستان مسلم لیگ ن کے ناراض رہنماء اور سابق وزیرداخلہ چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے کہ ڈان لیکس سے مریم نواز کا نام نکالنے کیلئے کوئی ڈیل نہیں ہوئی،جنرل

رضوان کے پہلے چند الفاظ تھے پروپیگنڈا توبہت ہوتا ہے مگرمریم نوازکا ڈان لیکس سے کوئی تعلق نہیں،تاہم مریم نواز کا نام کسی ڈیل کے تحت نکالا گیا یہ بالکل غلط ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ انہوں نے کہا کہ جب ڈی جی آئی ایس پی آر کی جانب سے ڈان لیکس پرٹویٹ آیا تومیں نے جواب دیا۔ان کے توکسی کے منہ میں زبان بھی نہیں تھی۔انہوں نے کہا کہ پرویز رشید کوقربانی کا بکرا میاں نوازشریف نے بنایا۔ پرویز رشید نے اپنا فون خود پیش کیا۔اس میں جوچیزیں نکلیں اس پررپورٹ آئی۔ پرویز رشید کا دفاع کرتا رہا۔ کہ یہ جوموبائل میں میسج ہے پرویز رشید ایسی انگریزی نہیں لکھ سکتا۔چوہدری نثار نےایک سوال’’مریم نوازکا نام ڈیل کے تحت ڈان لیکس سے نکالا گیا؟‘‘ کے جواب میں کہا کہ بالکل غلط ہے کہ کوئی ڈیل نہیں ہوئی۔ مریم نوازکا نام ڈان لیکس سے نکالنے کیلئے کوئی ڈیل نہیں ہوئی۔ ڈان لیکس پرمیٹنگ میں اسحاق ڈار، نواز شریف، جنرل رضوان، جنرل راحیل شریف اور میں تھے۔ جنرل رضوان کے پہلے چند الفاظ تھے پروپیگنڈا توبہت ہوتا ہے مگرمریم نوازکا ڈان لیکس سے کوئی تعلق نہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں