کیا وزیراعظم عمران خان مستعفی ہونے والے ہیں؟ خوفناک بیماری میں مبتلا ہونے کے بعد عمران خان کیا کررہے ہیں؟

لاہور (نیوز پاکستان) سینئر صحافی واینکر پرسن ارشد شریف کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان ڈپریشن کا شکار ہونا شروع ہوگئے ہیں، وزیراعظم عمران خان حکومتی کارکردگی اور عوام سے کیے گئے وعدوں سے متعلق پریشان ہیں، سینئر تجزیہ کار ارشد شریف نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ چیف جسٹس آف پاکستان نے کہا کہ احتسابی عمل سے سیاسی انجینئرنگ کا تاثر سامنے آرہا ہے جو ملک کیلئے انتہائی خطرناک ہے۔
ارشد شریف نے انکشاف کیا کہ مالم جبہ کیس جس میں پرویز خٹک اور اعظم خان ودیگرسب کو کلین چٹ مل جائے گی، اپوزیشن میں گرفتاریاں ہوتی ہیں لیکن یہ حکومت میں ہیں اس لیے گرفتاری نہیں ہوسکتی۔ ارشد شریف نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کارکردگی نہ دکھانے پر اب پریشان ہونا شروع ہوگئے ہیں کہ میں نے تو یہ وعدے کیے تھے۔ کیونکہ اب عوام بھی کہہ رہی ہے کہ یہ وعدے نہیں سبز باغ تھے۔ دوسری طرف ہارون الرشید نے بھی اپنے کالم میں لکھا کہ وزیراعظم مایوسی کا شکار ہونا شروع ہوگئے ہیں۔ مہینوں تک ایک بھی چھٹی نہ کرنے والے آدمی کے پاؤں تلے گھاس اگ آئی ہے۔ وہ بددلی کا شکار ہے ، معلوم نہیں کیوں؟ مشکلات نہیں بلکہ اندازِ فکر کی خرابی ہوتی ہے ، جو ایک پر عزم آدمی کو اس حال سے دوچار کرتی ہے ۔ 1992ء کے ورلڈ کپ میں پہلے چار میچ ہار کر بھی‘ جس آدمی کو ورلڈ کپ جیتنے کا یقین تھا ،اس کا مایوسی میں مبتلا ہونا حیرت انگیز نہیں تو پھر کیا ہے؟ ہارون الرشید کے مطابق ان کوایک ذمہ دار آدمی نے بتایا : خان صاحب اب تاخیر سے دفتر تشریف لاتے اور جلد چلے جاتے ہیں ۔ مہینوں تک ایک بھی چھٹی نہ کرنے والے آدمی کے پاؤں تلے گھاس اگ آئی ہے ۔ وہ بددلی کا شکار ہے ، معلوم نہیں کیوں؟ ویڈیو دیکھیں

اپنا تبصرہ بھیجیں